Let You Find ME

ڈھونڈو گے اگر ملکوں ملکوں ملنے کے نہيں ناياب ہيں ہم
تعبير ہے جس کی حسرت و غم اے ہم نفس و خواب ہيں ہم

اے درد بتا کچہ تو ہی بتا ، اب تک یہ معمہ حل نہ ہوا
ہم ميں ہے دل بے تاب نہاں يا آپ دل بے تاب ہيں ہم

ميں حيرت و حسرت کا مارا ، خامو‌ش کھڑا ہوں ساحل پر
درياۓ محبت کہتا ہے کچھ بھی نہيں پاياب ہيں ہم

لاکھوں ہی مسافر چلتے ہيں ، منزل پہ پہنچتے ہيں دو ايک

اے اہل زمانہ قدر کرو ، نایاب نہ ہوں کم ياب ہيں ہم

Advertisements

~ by UTS on May 9, 2009.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: