چھوٹی چھوٹی باتيں

توكل پرندوں سے سيكھيئے كہ جب وہ شام كو اپنے گھونسلوں يا بسيروں کو واپس جاتے ہيں توان كی چونچ ميں اگلے دن كے لئے كوئی دانہ نہيں ہوتا
ہركوئی چاہتا ہے كہ اُسے كاميابی مل جائے ليكن جب مسجد سے دن ميں 5 مرتبہ آواز آتی ہے “حي علی الفلاح” “آؤ كاميابی كی طرف”
تو
اس طرف جانے كی زحمت نہيں كی جاتی


جب نماز نہ پڑھيں تو مت سوچئے كہ وقت نہيں ملا
بلكہ
يہ سوچئے كہ آپ سے كونسی غلطی ہوئی ہے كہ اللہ تبارک وتعالٰی نے آپ كو اپنے سامنے كھڑا كرنا پسند نہ كيا

جو ايمان اتنا كمزور ہو كہ چل كر مسجد تک نہ لے جائے
وہ بھلا قيامت كے دن جنت ميں كيسے لے كر جائيگا ؟


محنت کرنا شہد کی مکھيوں سے سيکھيئے کہ ہر وقت شہد اکٹھا کرتی رہتی ہيں اور اکٹھا کرتے نہيں سوچتيں کہ اس ميں سے اسے کتنا ملے گا

افسوس كہ جس چيز كو آدمی سارى زندگی ہر جگہ تلاش كركے بھی حاصل نہيں كرسكتا وہ تو خود اُسے اپنے پاس بلاتی رہتی ہے

Advertisements

~ by UTS on September 10, 2010.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: